Home / Bawaseer / جنت سے ایک کھانا آیا ہے جو بواسیر درد نقرس چھوٹے جوڑوں کے درد گھنٹیا کی اکسیر دوا ہے

جنت سے ایک کھانا آیا ہے جو بواسیر درد نقرس چھوٹے جوڑوں کے درد گھنٹیا کی اکسیر دوا ہے

جنت سے ایک کھانا آیا ہے جو بواسیر درد نقرس چھوٹے جوڑوں کے درد گھنٹیا کی اکسیر دوا ہے

بواسیر کے مریض آپ کو در بدر گھومتے نظر آئیں گے اور بہت ہی کم لوگ ایسے ہوں گے جو اس موذی مرض سے نجات حاصل کر سکے ہوں مگر میں آپ کو ایک گوہر نایاب نسخہ دے رہاہوں جس کی تصدیق نبی پاک ؐ کی اس حدیث پاک سے ہوتی ہے. ” نبی پاک ؐ کے پاس انجیروں کا ایک تھال بطور تحفہ آیا آپ ؐ نے اپنے اصحاب ؓسے فرمایا” اگر میں کہتا کہ جنت سے ایک کھانا آیا ہے تو میں کہتا یہ انجیر ہے یہ بواسیر کو دور کرتی ہے اور درد نقرس کے لیے مفید ہے”. نقرس چھوٹے جوڑوں کے درد جسے عام زبان میں گھنٹیا کہتے ہیں کی بھی اکسیر دوا ہے اور خاص طور پر یورک ایسڈ کو بھی کم کرتی ہے.نقرس کے لیے ایک سے تین انجیر ہر کھانے سے پہلے یا بعد میں کھا لیں چھوٹے جوڑوں کے درد کے علاوہ یورک ایسڈ کو بھی ختم کرتی ہے. کافی عرصہ پہلے میرے پاس ایک فوجی بھائی آئے جو کہ عرصہ تین چار سال سے بواسیر کے مرض میں مبتلا تھے . ان کے بقول فوجی ڈاکٹروں کے علاوہ بہت سے حکیموں سے بھی علاج کرواچکے ہیں .مگر مرض کم ہونے کے بعد دوبارہ لاحق ہو جاتا ہے. میں نے فوجی بھائی سے کہا کہ آپ شہد خالص کی ایک بوتل کا انتظام کریں تو اس نے کہا یہ تو کوئی مسئلہ ہی نہیں. شہد تو میں آپ کو اپنے گاوں سے لا کر دے سکتا ہوں… چند دنوں کے بعد فوجی بھائی نے شہد کی ایک بوتل مجھے دی… میں نے کہا کہ دو تین دن کے بعد دوالے جائیں .
اس کا نسخہ درج ذیل ہے. شہد (خالص) : 1/2 کلوانجیر زردتازہ : 1/2 کلو انجیر کو کھرل میں ڈال کر ہلکا ہلکا کوٹ لیںاور یک جان کر لیں زیادہ زور سے نہ کوٹیں . اور اس دوران تھوڑا شہد اس میں شامل کرتے جائیں جب1/2 کلو شہد اس میں شامل ہو جائے گا تو ایک معجون سی تیار ہو جائے گی. مقدار خوراک ایک بڑا چمچ صبح دوپہر شام کو پانی سے ، اور گرم مزاج لوگ دودھ سے کھا لیں . اس کو بہت اچھی طرح چبا کر کھائیں تو فائدہ کرتی ہے.فوجی بھائی جب معجون کی ایک بوتل کھا چکے تو کہنے لگے میں نے اپنے فوجی ہسپتال کے بڑے ڈاکٹر سے چیک اپ کروایا تو ڈاکٹر صاحب کے بقول اب تو مسے (موکے) ختم ہو چکے ہیں .میں نے فوجی بھائی کو مشورہ دیا کہ آپ تین چار ماہ بعد خالص شہد کی ایک بوتل لے کر میرے پاس آئیں اور یہ دوا استعمال کریں. انشااللہ یہ مرض مکمل طور پر ختم ہو جائے گا.تو اس فوجی بھائی نے ایسا ہی کیا اور اس کے بعد اس نے ان گنت بواسیر کے مریض میرے پاس بھیجے . معجون کے اور فائدے یہ معجون ان مریضوں کے لیے بھی مفید ہے جو معدہ کی خرابی اور قبض کا شکار رہتے ہیں . اکسیر ترین چیز ہے. استعمال کریں اور ضرور لکھیں کہ آپ نے اس نسخہ کو کیسا پایا. بواسیر کے مسوں کا خاتمہ یہ نسخہ بواسیر کی جلن کو فوراًختم کرتا ہے اور جلن کوٹھیک کرنے کے علاوہ مسوں کو ختم کرتا ہے. بواسیر کے درد کا اکسیر خاص نسخہ ہے بار ہا مجرب ہے. شہد تیس ایم ایل۔۔ روغن زیتون تیس ایم ایل۔۔ دونوں اکسیر ترین چیزیں ہیں. ان کا خالص ہونا شرط ہے . دونوں کو اچھی طرح ملا لیں یعنی حل کر لیں . اس محلول کو انگلی کی مدد سے مسوں پر آہستہ آہستہ ملیں خاص طور پر درد اور جلن والی جگہ پرلگائیں. اور اس کے استعمال کا صحیح وقت رات کو سونے سے قبل ہے. اس محلول میں روئی بھگو کر (اچھی طرح ) مقعد یعنی پاخانہ والی جگہ کے اندر انگلی سے رکھیں. بواسیر کا درد اور جلن فوراًختم ہو جائے گی اور انشا ء اللہ مسے چند یوم میں ختم ہو جائیں گے.
بواسیر کا مجرب علاج میرے ایک دوست ہیں جو کہ سکول ٹیچر ہیں ان کی بیوی کو بواسیر کی تکلیف ہو گئی . جس کی وجہ سے مقعد میں شدید جلن اور درد تھا. بہت سی مختلف طب کی ادویات استعمال کیں مگر افاقہ کم ہی ہواایک دن کافی فکر مند تھے کیونکہ ڈاکٹروں نے کہا کہ اب اس کا آپریشن ہی ہو گا. ایسی صورت حال میں ان سے ملنے ایک بزرگ آئے ان کا بچہ ماسٹر صاحب کے پاس پڑھتا تھا باتوں باتوں میں ” بیوی” کا ذکر آگیاتو بزرگ کہنے لگے. کہ آپ کو ایک ایسا نسخہ خاص بتا دوں جس کی وجہ سے بہت سے لوگ اس موذی مرض سے نجات پاگئے ہیں . وہ نسخہ یہ ہے. شہد خالص تیس ایم ایل دودھ تازہ گائے کا  تیس ایم ایل تازہ گائے کے دودھ کو بہت اچھی طرح ابال لیں اس کے بعد چولہے سے اتار کر اس میں شہد حل کریں . یہ دودھ صبح اور شام کو خالی پیٹ پی لیں. اس کے استعمال سے بواسیر کا درد ختم ، جلن بھی ختم اور بواسیری مسوں سے خون آنا بند ہو جاتا ہے. میں اکثر اپنے مریضوں کو اس کے ساتھ ساتھ انجیر زرد تازہ (3عددیا 5عدد) ہر کھانے کے گھنٹہ بعد کھانے کو کہتا ہوں.جو کہ مسوں کو کاٹ دیتی ہے.اور بواسیر سے نجات مل جاتی ہے جیسا کہ فوجی بھائی والے نسخے اور حدیث سے ظاہر ہے. خاص شرط اس نسخے میں گائے کا دودھ ہی استعمال کریں ورنہ بواسیر کی درد اور جلن کو فائدہ حاصل نہ ہو گا.